تیمارداری اور مردم بیزاری 

کچھ بیمار ایسے ہوتے ہیں جنہیں تیمار داروں کے پہنچنے کے ساتھ ہی یہ احساس ہونے لگتا ہے کہ وہ تھک گئے ہوں گے، اس لئے انہیں اب واپس جا کے آرام کرنا چاہئے۔ کچھ ایسے بیمار ہوتے ہیں جنہیں فون پر تیمار داری کے لئے آنے کی خواہش کا اظہار کرنے والوں کی صحت اور آرام کا اسی وقت سے خیال ستانے لگتا ہے۔ میں سمجھتا ہوں، یہ بیمار انتہائی حساس طبیعت کے مالک ہوتے ہیں، لیکن بد قسمتی سے انہیں مردم بیزار اور گھمنڈی سمجھا جاتا ہے۔ ایک حساس طبیعت رکھںے کی وجہ سے نیکی کے دودھ سے لبا لب بھرے ہوئے تیمار داری کی خواہش رکھنے والوں کو میرا مشورہ ہے کہ وہ ایسے مریضوں کو ان کے حال پر چھوڑ دیں، اور اگر ہو سکے تو ایسا مشورہ دینے والوں کو بھی۔

۔۔۔

میں نے کہا جی، سنتے ہیں؟

ایک تو یہ نگوڑی فیس بک کہاں سے آگئی، میری سوتن۔

 

An old status from Facebook. ہیں جی۔

Nuzhat Abbas songs and Jam Saqi

یوم مئی کی چھٹی کی صبح نزہت عباس کے نام۔

نزہت عباس دیس گئیں تو وہاں سے جام ساقی کا حیات نامہ لائیں جو بنیادی طور پر ان کی کاوش ہے لیکن جسے محقق سلیم احمد کی رہنمائی میسر آئی۔ جام اساطیری حیثیت اختیار کر گئے ہیں، اور یہ کتاب یقیناً ان کی زندگی کے اور اس حوالے سے اپنے دور کے بائیں بازو اہم پہلوئوں کا احاطہ کرتی ہے۔

Punjabi Folk Songs Continue reading “Nuzhat Abbas songs and Jam Saqi”

Pakistan’s blind love for China | Babar Ayaz

My observation:

The article has raised several issues that need to be addressed. Two of these are important. Indeed they form the locus for the others.
1. The strong bonds between China and Pakistan are of strategic importance for both the countries. In the case of Pakistan they are at the expense of its relationship with India, which are informed by Pakistan’s fear of India and therefore by animosity towards it. On the other hand, China safeguards its interests against India in a non-belligerent manner. Who is the greater beneficiary?
2. Economic benefits to Pakistan from CPEC are yet to be defined, while their quantification has not and cannot be attempted.
There is a tension inherent between the strategic benefit (driven by animosity towards India) as outlined in consideration 1 and its long-term economic benefit as outlined in consideration 2.

For Pakistan, CPEC is not only of economic importance, as the name suggests, but it is also an assurance that the world’s second-biggest economic power would support it against any possible Indian aggression

Source: DailyTimes | Pakistan’s blind love for China